الثلاثاء، 03 ذو القعدة 1438| 2017/07/25
Saat: (M.M.T)
Menu
القائمة الرئيسية
القائمة الرئيسية

المكتب الإعــلامي
ولایہ پاکستان

ہجری تاریخ    15 من شوال 1438هـ شمارہ نمبر: PR17054
عیسوی تاریخ     اتوار, 09 جولائی 2017 م

امریکی راج ختم کرو، خلافت قائم کرو

باجوہ-نواز حکومت ہماری افواج کو امریکہ کے سامنے “کرائے کی فوج” کے طور پر پیش کر کے ان کی توہین اور تذلیل کر رہی ہے

 

جب سے ٹرمپ انتظامیہ نے پاکستان پر دباؤ بڑھانا شروع کیا ہے پاکستان کے سیاست میں ایک بحث شروع ہو گئی ہے۔ 4 جولائی 2017 کو امریکی سینٹ کی آرمز سروسزکمیٹی کے سربراہ سینیٹر جون مکین نے کابل میں ایک پریس کانفرنس میں کہا، “ہم نے بالکل واضح کر دیا ہے کہ ہم ان سے (پاکستان سے) امید رکھتے ہیں کہ ہمارے ساتھ تعاون کریں گے خصوصاً حقانی نیٹ ورک اور دہشت گرد تنظیموں کے خلاف۔۔۔۔اگر وہ اپنا رویہ تبدیل نہیں کرتے تو ہو سکتا ہے کہ ہم پاکستان کے خلاف ایک قوم کی حیثیت سے رویہ تبدیل کر لیں”۔ یہ بیان اس وقت دیا گیا جب پاکستان کے چیف آف آرمی سٹاف جنرل قمر جاوید باجوہ نے اپنے عہدے کی تذلیل اور غلامانہ کردار کا مظاہرہ کرتے ہوئے بذات خود جون مکین اور آرمز سروسزکمیٹی کو جنوبی وزیرستان کا چند روز قبل ہی ایک دورہ کرایا تھا جس کا مقصد امریکہ کی “دہشت گردی” کی خلاف جنگ میں پاکستان کی “قربانیوں” کا مشاہدہ کرانا تھا۔ یہ دورہ ایسا ہی تھا جیسا کہ برطانوی راج میں وائسرائے ان علاقوں کا دورہ کرتا تھا اور مقامی کٹھ پتلیاں اپنی وفاداری کا یقین دلانے کے لیے اس امید پر اس کے پاس بھاگے جاتے تھے کہ انہیں برطانوی راج کی سرپرستی اور مقامی طاقتور عہدوں پر برقرار رہنے کی یقین دہانی حاصل ہو جائے۔ اور یقیناً یہ وائسرائے جون مکین کا تکبر ہے کہ اس نے پاکستان میں اپنے شاندار استقبال اور پاکستان کی سیاسی و فوجی قیادت کی جانب سے وفاداریوں کی یقین دہانی کو نظر انداز کرتے ہوئے پاکستان کو دھمکی دی۔ اے اللہ ان لوگوں کو ذلیل و رسوا کر دے جو آپ سبحانہ و تعالیٰ کے علاوہ کسی اور سے عزت کے طلبگار ہیں!

 

الَّذِينَ يَتَّخِذُونَ الْكَافِرِينَ أَوْلِيَاءَ مِن دُونِ الْمُؤْمِنِينَ ۚ أَيَبْتَغُونَ عِندَهُمُ الْعِزَّةَ فَإِنَّ الْعِزَّةَ لِلَّهِ جَمِيعًا

“جن کی حالت یہ ہے کہ مسلمانوں کو چھوڑ کر کافروں کو دوست بناتے پھرتے ہیں کیا ان کے پاس عزت کی تلاش میں جاتے ہیں؟ (تو یاد رکھو) عزت تو ساری کی ساری اللہ کے قبضے میں ہے” (النساء:139)

 

پاکستان کی سیاسی و فوجی قیادت، عزت اور وقار کے احساس سے عاری ہو کر، 7 جولائی کو قومی سلامتی کمیٹی کے اجلاس کے لیے جمع ہوئی اور بغیر سوچے سمجھے افغانستان کے مجاہد لوگوں کو دبانے اور کچلنے کی امریکی کوششوں میں حمایت جاری رکھنے کا اعلان کیا۔ اجلاس کے بعد جاری ہونے والے بیان میں کہا گیا، “پاکستان افغانستان میں امن اور ترقی کے لیے کام کرتا رہے گا ۔۔۔۔ اور ہم افغانستان میں جلد از جلد حالات کو معمول پر لانے کے لیے کام کرتے رہیں گے۔ لیکن اس کے لیے ساتھ ساتھ افغان حکومت کو بھی کوشش کرنے کی ضرورت ہے کہ وہ اپنے علاقے پر موثرکنٹرول بحال کرے“۔ پچھلے چھ ہفتوں میں قومی سلامتی کمیٹی کا یہ تیسرا اجلاس تھا اور ان تمام کے تمام تین اجلاسوں میں موضع بحث افغانستان میں امریکی صلیبی جنگ تھی۔ اس طرح باجوہ-نواز حکومت نے ٹرمپ انتظامیہ کی جانب سے افغان پالیسی جائزے کے مکمل ہونے سے قبل کمزور موقف پیش کیا ہے۔ باجوہ-نواز حکومت کی غداری پینٹاگون کی جانب سے جاری ہونے والی حالیہ رپورٹ سے واضح ہے جس نے پاکستان کو “افغانستان میں سب سے موثر بیرونی کردار” قرار دیا ہے۔ یقیناً پاکستان اور مسلم دنیا میں ہونے والے حالیہ واقعات ہمیں مسلسل یہ بتا رہے ہیں کہ امت کی بدحالی اور تذلیل کا سبب یہ ہے کہ ان پر مسلط حکمران امت کی طاقت کو دشمنوں، مغربی صلیبیوں، کی خدمت میں پیش کر کے ان کی مضبوطی کے لیے استعمال کر رہے ہیں۔

 

اے افواج پاکستان کے مخلص افسران!

کیا آپ کو آپ کی طاقت کے حوالے سے کسی یاد دہانی کی ضرورت ہے خصوصاً افغانستان کے معاملےمیں جس کے معاملات کئی دہائیوں سے آپ کے ہاتھوں میں ہیں؟ ہمارا بدترین دشمن ہمارے سامنے موجود ہے جو آپ کی بے عزتی اور تذلیل کرنے کا کوئی موقع نہیں چھوڑتا، وہ بھی آپ کی طاقت کی تصدیق کر رہا ہے۔ یہ کیسے ہو سکتا ہے کہ ہمارا دشمن کھلے عام آپ کی طاقت کو تسلیم کرے لیکن آپ سے خوف نہ کھائے؟ یہ کیسے ہو سکتا ہے کہ ہمارا دشمن آپ کی تذلیل کرے لیکن اس کے باوجود وہ آپ سے مزید تعاون و حمایت کی امید رکھتا ہے؟ یہ کیسے ہو سکتا ہے کہ آپ کی طاقت افغانستان میں امریکی قبضے کو مستحکم کرنے کے لیے استعمال ہو لیکن اسلام کی خدمت میں پاکستان و افغانستان کے مسلمانوں کے تحفظ کے لیے استعمال نہ ہو جبکہ خطے میں امریکی موجودگی نے صرف اور صرف تباہی و بربادی کو مقدر بنا دیا ہے؟ آپ کی قیادت اور پاکستان کی سیاسی قیادت میں موجود غدار ہی ہیں جنہوں نے آپ کو باندھ رکھا ہے اور آپ کی طاقت کو اسلام اور مسلمانوں کے مفادات کی تکمیل کے لیے استعمال نہیں کرتے بلکہ امریکی مفادات کی تکمیل کے لیے استعمال کرتے ہیں۔ آگے بڑھیں، اس غدار قیادت کو اکھاڑ پھینکیں، اس سرزمین پر نبوت کے طریقے پر خلافت کے قیام کے لیے حزب التحریر کو نصرۃ فراہم کریں، خلیفہ راشد کو بیعت دیں جو آپ کی طاقت کو اسلام کی خدمت کے لیے استعمال کرے گا اور خطے سے امریکی راج کو ختم کر دے گا۔

وَلَقَدْ كَانُوا عَاهَدُوا اللَّهَ مِن قَبْلُ لَا يُوَلُّونَ الْأَدْبَارَ ۚ وَكَانَ عَهْدُ اللَّهِ مَسْئُولًا

“اس سے پہلے تو انہوں نے اللہ سے عہد کیا تھا کہ پیٹھ نہ پھیریں گے اور اللہ تعالیٰ سے کیے ہوئے وعدہ کی باز پرس ضرور ہو گی” (الاحزاب:15)

 

ولایہ پاکستان میں حزب التحریر کا میڈیا آفس

المكتب الإعلامي لحزب التحرير
ولایہ پاکستان
خط وکتابت اور رابطہ کرنے کا پتہ
تلفون: 
http://www.hizb-ut-tahrir.info
E-Mail: [email protected]

Leave a comment

Make sure you enter the (*) required information where indicated. HTML code is not allowed.

دیگر ویب سائٹس

مغرب

سائٹ سیکشنز

مسلم ممالک

مسلم ممالک