الثلاثاء، 12 صَفر 1442| 2020/09/29
Saat: (M.M.T)
Menu
القائمة الرئيسية
القائمة الرئيسية

المكتب الإعــلامي
ولایہ پاکستان

ہجری تاریخ    9 من ذي الحجة 1441هـ شمارہ نمبر: 84 /1441
عیسوی تاریخ     جمعرات, 30 جولائی 2020 م

پریس ریلیز

ہندو ریاست کی تمام تر اشتعال انگیزیوں کے باوجود  کب تک پھپوندی زدہ مذمتوں اور کھوکھلے نعروں سے کام چلایا جائے گا؟

 

28 جولائی کو افواج پاکستان کے جدید ترین ٹینک الخالد -ون کو آرمرڈ کوررجمنٹ میں شامل کرنے کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے جنرل باجوہ نے کہا  کہ "اگر ہمیں اشتعال دلایا گیا، تو ہم اپنی پوری طاقت سے جواب دیں گے"۔پاکستان کے مسلمان حیران و پریشان ہیں کہ ہندو ریاست کی جانب سے   مقبوضہ کشمیر میں بدترین مظالم ، لائن آف کنٹرول پرمسلسل جارحیت اور معصوم شہریوں اور فوجیوں کی شہادتوں کے نہ ختم ہونے والے سلسلے کے بعدباجوہ-عمران حکومت کونسے اشتعال انگیز عمل کا انتظار کر رہی ہے؟   ہندو ریاست نے 5 اگست 2019 کو کشمیر کو بھارتی یونین میں شامل کرلیا، جو آخری ریڈ لائن تھی، ہمارے مسلمان بہن بھائیوں پر بدترین مظالم کو تیز تر کردیا ،  اور اب نریندرمودی نے باجوہ عمران حکومت کی غیرت کو للکارتے ہوئے  5  اگست 2020 کو ایودھیا میں بابری مسجد کی بنیادوں پر رام مندر کی تعمیر کے افتتاح  کا اعلان کردیا ، ٹھیک اسی دن جب مقبوضہ کشمیر کے جبری انضمام کو ایک سال پورا ہوجائے گا،  لیکن باجوہ-عمران حکومت کی غیرت بغیر کوئی انگڑائی لیے سو رہی ہے اور اسے ابھی مزید اشتعال انگیز اعمال کا انتظار ہے، بلکہ اس نے واہگہ بارڈر افغان بھارت تجارت کیلئے کھول دی ہے ۔ اس حکومت کےمطابق بھارت FATF کے ذریعے پاکستان کو گرے سے بلیک لسٹ میں لے جانا چاہتا ہے، لیکن باجوہ-عمران حکومت، بجائے اشتعال میں آنے کے،الٹاFATF کے مطالبات پاکستان کے قوانین کا حصہ بنا رہی ہے تا کہ پاکستان کا کوئی مسلمان مقبوضہ کشمیر کی جدوجہد آزادی کو مادی  و جانی مدد پہنچانے کا تصور بھی نہ کرے۔ہندو ریاست تمام بین الاقوامی قوانین اور اخلاقیات کو پس پشت ڈال کربھارتی جیلوں میں قید پاکستانی ماہی گیروں کو قتل کرکے ان کی لاشیں پاکستان بھیج دیتی ہے ،کلبھوشن یادیو نیٹ ورک کے ذریعے پاکستان کے لوگوں کی جان و مال کوبرباد کرتی ہے لیکن باجوہ-عمران حکومت کوکوئی  اشتعال نہیں آتا بلکہ ہندو دہشتگردکلبھوشن یادیوکو قانونی سہولت فراہم کرنے کے لیے رات کےاندھیرے میں خاموشی سے آرڈیننس جاری کردیا جاتا ہے۔

 

یہ سول اور فوجی قیادت صرف مُردے ہیں،  ان میں کوئی احساس اور غیرت نہیں۔ یہ لاشیں گنتے ہیں، زخمیوں کے اعداد و شمار جمع کرتے ہیں اور اس کو ٹویٹ میں جاری کر دیتے ہیں، جیسے کہ یہ صلیبی کافروں کے اعداد و شمار جمع کرنے کے کلرک اور منشی ہو۔  یہ پاکستان کیلئے سیکیوریٹی رسک بن چکے ہیں۔  یہ عوام کو اس جعلی امید کا دلاسا  دے رہے ہیں کہ ہندو ریاست کی سہولت کار صلیبی امریکہ ہندو ریاست پر دباؤ ڈال کر ہمیں کشمیر حاصل کر کے دے گا۔ یہ پاکستان کے عوام کو بالواسطہ طور پر یہ لارا دے رہے ہیں کہ ملحد چینی بھارت کو نتھ ڈال کر ہمیں کشمیر پلیٹ میں رکھ کر دے دیں گے، وہی چینی جو خود کشمیر کے ایک حصے پر قابض اور دسیوں لاکھ یوغر مسلمانوں پر زمین تنگ کئے ہوئے ہیں۔ یہ حکومت ہندو ریاست کی جانب سے ہر ریڈ لائن کراس ہونے پر میلوں پیچھے ایک اور ریڈ لائن کھینچ لیتی ہے اور یہ سلسلہ چلتا رہتا ہے۔ اور کوئی بعید نہیں کہ آزاد کشمیر یا پاکستان پر حملہ ہونے کی صورت میں بھی یہ اقوام متحدہ کو دہائیاں دیتے رہیں! یہ کیسے مسلمان ہیں ؟ جس کسی مسلمان کے دل میں رتی برابربھی ایمان کی شمع موجود ہوگی وہ اب تک ہندو ریاست کی جارحیت کا منہ توڑ جواب دینے کے لیے اشتعال میں آچکا ہوتا۔ لیکن  ان کی غیرت کبھی نہیں جاگے گی چاہے ہندو ریاست کے مظالم سے آسمان پھٹ اور زمین شق ہو جائے!!!

 

اے افواج پاکستان میں موجود مسلمانو!

جمہوری اور فوجی قیادتیں دونوں ہی پاکستان میں امریکی استعمار کے مضبوط ایجنٹ ہیں ۔ ان کھوکھلےنعروں کے باعث قیام پاکستان  سے آج  تک ہم پے درپے علاقے ہی کھوتے جارہے ہیں، گورداسپور، حیدرآباد دکن، تین مشرقی دریا، بنگال، سیاچن اور اب مقبوضہ کشمیر۔  صرف خلافت نے ہی مسلسل مسلم افواج کو فتح یا شہادت کے عظیم مشن اور منزل کیلئے استعمال کیا جس کے باعث مسلمان تقریباً ہزار برس تین براعظموں پر حاکم رہے جبکہ دنیا کی دیگر بڑی طاقتیں ہمیں وقتاً فوقتاً خراج ادا کرتی تھی۔ استعماری آقاؤں اور بین الاقوامی آرڈر کی غلامی کا طوق گلے میں ڈالنے کے بعد ان حکمرانوں کے ڈھکوسلوں سے مقبوضہ کشمیرکبھی آزاد نہیں ہو سکتا۔ آپ کے عملی اقدامات کا وقت آ چکا ہے۔ صرف ایک خلیفہ کی بیعت سے ہی یہ صورتحال پلٹے گی، جو اس بین الاقوامی آرڈر کو مسترد کر کے ایک نئے ورلڈ آرڈر کی بنیاد رکے گا۔ ہر شخص کا رزق اور اجل مقرر ہے، جس میں کوئی ردو بدل نہیں ہو سکتا۔ قلم رک چکے ہیں اور سیاہی خشک ہو چکی ہے۔ آپ کے اوپر ایسی کوئی مصیبت نہیں آ سکتی جو آپ کیلئے پہلے سے لکھ نہ دی گئی ہو۔ حزب التحریر آپ کے اردگرد ہر جانب موجود ہے۔ تو قیام خلافت کیلئے بیعت کےعظیم اعزاز کی جانب آگے بڑھیں ، جس کے بعد عظمتوں اور رفعتوں کے نئے سلسلے کا آغاز اور ذلت و رسوائی کا خاتمہ ہو گا۔

﴿وَٱللَّهُ غَالِبٌ عَلَىٰٓ أَمۡرِهِۦ وَلَٰكِنَّ أَكۡثَرَ ٱلنَّاسِ لَا يَعۡلَمُونَ

« اوراللہ اپنے کام پرپوری طرح غالب ہے لیکن اکثر لوگ نہیں جانتے»(یوسف، 12:21)۔

 

ولایہ پاکستان میں حزب التحريرکا میڈیا آفس

المكتب الإعلامي لحزب التحرير
ولایہ پاکستان
خط وکتابت اور رابطہ کرنے کا پتہ
تلفون: 
http://www.hizb-ut-tahrir.info
E-Mail: HTmediaPAK@gmail.com

Leave a comment

Make sure you enter the (*) required information where indicated. HTML code is not allowed.

دیگر ویب سائٹس

مغرب

سائٹ سیکشنز

مسلم ممالک

مسلم ممالک