الثلاثاء، 24 شوال 1443| 2022/05/24
Saat: (M.M.T)
Menu
القائمة الرئيسية
القائمة الرئيسية

بسم الله الرحمن الرحيم

 
خواہ چہرے ہزار بار بھی بدل جائیں ، نظام بدلے بغیر کوئی تبدیلی ممکن نہیں۔ پاکستان میں حقیقی تبدیلی جمہوریت کے خاتمے اور خلافت کے قیام سے آئے گی
 
'کرپشن سے پاک' جمہوریت کیلئے جس بھان متی کے کنبے کو جوڑ کر دس سالہ پروجیکٹ کا آغاز کیا گیا تھا، وہ ساڑھے تین سال میں ہی اپنے ہی بوجھ تلے دب کر بکھر گیا۔ مسلمانوں کے سامنے واضح ہے کہ 'کرپشن سے پاک' جمہوریت میں بھی مافیا ہی حکومت کرتے رہے، جس میں عوام پر ٹیکس میں اضافہ ہی ہوا ،جو آئی ایم ایف اور سود خور بینکنگ مافیا کی جھولی میں ڈال دیا گیا۔ عمران خان کے دور حکومت میں کشمیر کی اس سودا بازی کی تکمیل ہوئی جس کا آغاز مشرف دور میں ہوا اور زرداری، نواز کے دور میں اس استعماری منصوبے میں پیش رفت ہوئی۔ عمران خان کے دور حکومت میں بھی ماضی کی حکومتوں کی طرح امت کے مفاد پر استعمار کے مفاد کو فوقیت دی گئی یہ اس نظام میں کسی ایک فرد کا مسئلہ نہیں، بلکہ جمہوریت کے خمیر کا حصہ ہے۔ قانون سازی، یعنی حلال اور حرام کے تعین کا حق پارلیمنٹ میں بیٹھے لوگوں کو دینے کی وجہ سے جمہوریت بذات خود تمام مسائل کی جڑھ ہے. پاکستان کے مسلمان کسی مغالطے میں نہیں۔ تبدیلی صرف نظام کی تبدیلی ہے جو جمہوریت کے خاتمے اور اس کی جگہ پر خلافت کے قیام سے آئے گی۔
 
اے افواج پاکستان میں موجود مخلص افسران!
آگے بڑھیں اور اس نظام کا خاتمہ کر کے اس وحی پر مبنی نظام کی جانب لوٹ آئیں، جو اس ذات نے نازل کیا ہے جو کل علوم کا مالک ہے۔ آپ اسلام کے اور مسلمانوں کے پراجیکٹ کے ساتھ کھڑے ہوں اور نبوت کے نقش قدم پر خلافت کے دوبارہ قیام کے لیے نصرۃ فراہم کریں۔ اللّٰہ سبحانہ و تعالیٰ نے ارشاد فرمایا؛
 
﴿أَلَا يَعۡلَمُ مَنۡ خَلَقَ وَهُوَ ٱللَّطِيفُ ٱلۡخَبِيرُ
«بھلا وہ نہیں جانے گا جس نے پیدا کیا؟ اس پر وہ پوشیدہ باتوں کا جاننے والا اور باریک بین بھی ہو»(سورہ الملک، 67:14)

 

#RejectDemocracyEstablishKhilafah

Sunday, 09 Ramadan al-Mubarak 1443 AH - 10 April 2022 CE

 

 

أدنا النص بالأردو:
 
خواہ چہرے ہزار بار بھی بدل جائیں ، نظام بدلے بغیر کوئی تبدیلی ممکن نہیں۔ پاکستان میں حقیقی تبدیلی جمہوریت کے خاتمے اور خلافت کے قیام سے آئے گی 'کرپشن سے پاک' جمہوریت کیلئے جس بھان متی کے کنبے کو جوڑ کر دس سالہ پروجیکٹ کا آغاز کیا گیا تھا، وہ ساڑھے تین سال میں ہی اپنے ہی بوجھ تلے دب کر بکھر گیا۔ مسلمانوں کے سامنے واضح ہے کہ 'کرپشن سے پاک' جمہوریت میں بھی مافیا ہی حکومت کرتے رہے، جس میں عوام پر ٹیکس میں اضافہ ہی ہوا ،جو آئی ایم ایف اور سود خور بینکنگ مافیا کی جھولی میں ڈال دیا گیا۔ عمران خان کے دور حکومت میں کشمیر کی اس سودا بازی کی تکمیل ہوئی جس کا آغاز مشرف دور میں ہوا اور زرداری، نواز کے دور میں اس استعماری منصوبے میں پیش رفت ہوئی۔ عمران خان کے دور حکومت میں بھی ماضی کی حکومتوں کی طرح امت کے مفاد پر استعمار کے مفاد کو فوقیت دی گئی یہ اس نظام میں کسی ایک فرد کا مسئلہ نہیں، بلکہ جمہوریت کے خمیر کا حصہ ہے۔ قانون سازی، یعنی حلال اور حرام کے تعین کا حق پارلیمنٹ میں بیٹھے لوگوں کو دینے کی وجہ سے جمہوریت بذات خود تمام مسائل کی جڑھ ہے. پاکستان کے مسلمان کسی مغالطے میں نہیں۔ تبدیلی صرف نظام کی تبدیلی ہے جو جمہوریت کے خاتمے اور اس کی جگہ پر خلافت کے قیام سے آئے گی۔ اے افواج پاکستان میں موجود مخلص افسران! آگے بڑھیں اور اس نظام کا خاتمہ کر کے اس وحی پر مبنی نظام کی جانب لوٹ آئیں، جو اس ذات نے نازل کیا ہے جو کل علوم کا مالک ہے۔ آپ اسلام کے اور مسلمانوں کے پراجیکٹ کے ساتھ کھڑے ہوں اور نبوت کے نقش قدم پر خلافت کے دوبارہ قیام کے لیے نصرۃ فراہم کریں۔ اللّٰہ سبحانہ و تعالیٰ نے ارشاد فرمایا؛ ﴿أَلَا يَعۡلَمُ مَنۡ خَلَقَ وَهُوَ ٱللَّطِيفُ ٱلۡخَبِيرُ﴾ «بھلا وہ نہیں جانے گا جس نے پیدا کیا؟ اس پر وہ پوشیدہ باتوں کا جاننے والا اور باریک بین بھی ہو»(سورہ الملک، 67:14)
Last modified onجمعہ, 15 اپریل 2022 04:38

Leave a comment

Make sure you enter the (*) required information where indicated. HTML code is not allowed.

اوپر کی طرف جائیں

دیگر ویب سائٹس

مغرب

سائٹ سیکشنز

مسلم ممالک

مسلم ممالک